اس شرط پر بیوی چاہے تو چار سال بعد دوسری شادی کرسکتی ہے

جمعہ, 16 جون 2017 22:44

لاہور: ناچاقی یا کسی اور ایسی صورت میں جب کسی عورت کا خاوند کہیں چلا جائے ،یا گم ہوجائے اور اسکی کوئی خبر نہ مل رہی ہو ،نہ وہ بیوی سے رابطہ کررہا ہوں تو اسلام ایسی عورت کو حق دیتا ہے کہ فقہ کے مطابق دوسری شادی کرلے۔مفتی محمد شبیر قادری کا کہنا ہے کہ جس عورت کا خاوند مفقود الخبر (غائب) ہو وہ امام مالک ؓ کے فتویٰ کے مطابق چار سال تک شوہر کا انتظار کر کے کسی اور جگہ حسب منشاء عقد نکاح کر سکتی ہے۔ مفتی صاحب نے منہاج القرآن کی فتوٰٰی ویب پر ایک سوال کے جواب میں کہا ہے کہ احناف کا فتویٰ آج کل اسی قول پر ہے۔ ہماری دانست میں مذکورہ عورت کو مجسٹریٹ کے روبرو پیش ہو کر اور اپنے خاوند کے مفقود الخبر ہونے کا ثبوت دے کر، دوسری شادی کا اجازت نامہ حاصل کر کے دوسری شادی کر لینی چاہیے۔

جب شادی کا حکم بھی معلوم ہو گیا اور مجسٹریٹ کا اجازت نامہ بھی مل گیا تو پہلے شوہر کے واپس آنے کی صورت میں بھی کوئی مسئلہ پیدا نہیں ہو گا۔ کیونکہ اس طرح شرعی مسئلہ کو ریاستی تحفظ حاصل ہو گا۔ یہ عورت دوسرے خاوند کی ہی بیوی رہے گی، پہلے سے کوئی تعلق نہ ہو گا۔ البتہ پہلے شوہر کے ذمے اگر حق مہر یا چار سال کا خرچہ واجب الادا ہے، عورت چاہے بذریعہ عدالت وصول کرے، چاہے تو معاف کرسکتی ہے۔

Read 1833 times

Leave a comment

Make sure you enter the (*) required information where indicated. HTML code is not allowed.

Pakistanviews.org

pakistanviews.org stands as a website enlightening the masses with all information related to current affair, entertainment, sports, technology, etc. It has been brought into existence to ensure that voice of Pakistan reaches the masses. Ensuring that a true picture of Pakistan is portrayed in the right manner to the world. The website is to bring forth the real picture of Pakistan negating avenues of Terrorism and Non-State Acto