صفحہ اول دنیا حوثیوں نے الحدیدہ کی بندرگاہ پر روکا گیا جہاز چھوڑ دیا

حوثیوں نے الحدیدہ کی بندرگاہ پر روکا گیا جہاز چھوڑ دیا

53 second read
0
0
7
Share on Pinterest
Share with your friends










Submit

اقوام متحدہ(این این آئی) یمن میں قانونی حکومت کی حمایت میں برسرپیکار عرب اتحاد نے کہا ہے کہ حوثی ملیشیا نے الحدیدہ کی بندرگاہ پر ایک جہاز جی میوس کو 62روز تک روکے رکھنے کے بعد چھوڑ دیا ہے۔میڈیا رپورٹس کے مطابق ایک بیان میں عرب اتحاد نے کہا کہ الحدیدہ کی بندرگاہ پر4 اور جہاز بھی لنگر انداز ہو چکے ہیں اور ان پر لدا ہوا سامان اتارا جارہا ہے جبکہ بندرگاہ پر4 اور جہاز داخلے کے منتظر ہیں۔ الصلیف کی بندرگاہ پر بھی2 بحری جہاز داخلے کے منتظر ہیں ان میں ایک لنگرانداز ہونے کے انتظار میں ہے۔ادھر اقوام متحدہ کے رابطہ کاری دفتر برائے انسانی امور نے ایک رپورٹ میں کہا ہے کہ مختلف ممالک نے یمن کے لیے ایک ارب 54 کروڑ ڈالر کی امداد دی ہے اور اس میں سعودی عرب کا حصہ سب سے زیادہ ہے۔ جو ممالک یمن کے لیے انسانی امدادی ردعمل منصوبے کا حصہ نہیں ،انھوں نے بھی 19 کروڑ 60 لاکھ ڈالرعطیہ کیے ہیں۔

Share on Pinterest
Share with your friends










Submit
مزید مماثل خبریں

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Check Also

چین کے اہم مسلم شہر میں مسلمانوں پر سخت پابندیاں

فرانسیسی خبررساں ادارے کے مطابق مقامی افراد کا کہنا ہے کہ انہیں ڈر ہے کہ دانستہ طور پر اسل…