More share buttons
Share with your friends










Submit
تجارت

یکم جولائی سے پٹرولیم مصنوعات کی قیمت میں اضافے کا امکان

پٹرول کی مصنوعی قلت پیدا کرنے والی آئل مارکیٹنگ کمپنیاں اب کروڑوں روپے منافع کمائیں گی۔

Share on Pinterest
Share with your friends










Submit

لاہور: عالمی مارکیٹ میں خام تیل کی قیمتوں میں 100فیصد اضافہ ہوگیا ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ پاکستان میں یکم جولائی سے پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں بڑے اضافے کا امکان ہے، پٹرول مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے سے غریب اور تنخواہ دار طبقات پر براہ راست اثر پڑے گا۔

تفصیلات کے مطابق حکومت کی جانب سے اگلے ماہ جولائی سے پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں بڑے اضافے کا امکان ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ عالمی مارکیٹ کی خام تیل کی قیمتوں میں 100فیصد اضافہ ہوگیا ہے. دو ماہ قبل 20 ڈالر فی بیر ل ملنے والے خام تیل 41 ڈالر 18سینٹ فی بیرل ہوگئی ہے. یعنی قیمت میں دو گنا سے زائد اضافہ ہوگیا ہے۔

اوگرا کی جانب سے پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے کی سمری آخری ہفتے میں ارسال کی جائے گی۔

تاہم حکومت بجٹ میں پٹرولیم لیوی 30روپے فی لیٹر فکس کرنے کا اعلان کرچکی ہے.اسی طرح 17فیصد سیلز ٹیکس اور ریٹ مارجن اس کے علاوہ وصول کیا جائے گا۔

دوسری جانب عوام نے پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں اور اشیائے خوردونوش پر مزید ٹیکسز کم کرنے کا مطالبہ کیا ہے، لیکن اگر پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں بڑا اضافہ کیا گیا تو مہنگائی ایک اور سیلاب آئے گا. جس کا مزدور، مڈل اور تنخواہ دار طبقات پر براہ راست اثر پڑے گا۔

پٹرول کی مصنوعی قلت پیدا کرنے والی آئل مارکیٹنگ کمپنیاں اب کروڑوں روپے منافع کمائیں گی۔

Share on Pinterest
Share with your friends










Submit
Tags

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close