More share buttons
Share with your friends










Submit
انٹرٹینمنٹ

پاکستانی فنکاروں کے بالی وڈ میں قابل اعتراض کردار ملکی بدنامی کا باعث ہیں، نور

Share on Pinterest
There are no images.
Share with your friends










Submit

لاہور:  فلم اسٹارنور نے بالی وڈفلم ’’ کپوراینڈ سنز‘‘ دیکھنے کے بعد معروف اداکارفواد خان کوقابل اعتراض کردار نبھانے پر شدید تنقیدکا نشانہ بناڈالا۔ پاکستانی فلموں کوسائن کرنے کے لیے کہانی، کرداراورمعاوضے کی شرائط جب کہ بھارتی فلموں میں کام کے لیے کسی بھی طرح کا کردارنبھانا اب معمول بنتا جارہا ہے۔

پہلے ہی بالی وڈ فلموں میں پاکستانی فنکاروں کو معیاری کام نہیں دیا جاتا لیکن اس کے باوجود ہرکوئی بھارت جاکر’’ شہرت کی بلندیوں‘‘ کوچھونا چاہتا ہے۔  نور کا کہنا تھا کہ بالی وڈ میں بڑی سوچی سمجھی سازش کے تحت پاکستان کونیچا دکھانے کے لیے ہمارے فنکاروں کوایسے کردارآفرکیے جاتے ہیں جن کا مقصد وطن عزیز کی ساکھ کونقصان پہنچانا ہے۔ لائن آف کنٹرول پربھارتی فوج کی خلاف ورزی جاری ہے، راء کا ایجنٹ کارروائیاں کرتا پکڑا گیا ہے لیکن اس کے باوجود ہمارے ملک کے باصلاحیت فنکاروہاں پرجاکرایسا کام کررہے ہیں جس سے وطن عزیزکا امیج متاثر ہورہاہے۔ فواد خان ہمارے ملک کا باصلاحیت اداکار ہے۔

لاکھوں لوگ اس کے چاہنے والے ہیں اوراس کو پسند کرتے ہیں ۔ ایسے مقبول فنکارکواس فلم کوسائن کرنے سے پہلے سوچنا چاہیے تھا کہ اس کے اس کردارسے پاکستانیوں کوتکلیف پہنچے گی۔ اگرکہانی میں اس قدر جان تھی اوریہ کرداربہت جاندارتھا تویہ کرداربھارتی اداکارسدھارتھ ملہوترا سے کروانا چاہیے تھا لیکن انھوں نے ایسا نہیں کیا۔

اس کا مقصد صرف اورصرف پاکستان کوبدنام کرنا تھا۔ بالی وڈ والے اچھی طرح اس بات کوجانتے ہیں کہ فوادخان ہمارے ملک کا سپراسٹارہے اورانھوں نے ایک سازش کے تحت انھیں ایسے قابل اعتراض کردارمیں سائن کرکے دنیا کوبتایا ہے کہ پاکستانی سپراسٹارہمارے ہاں ایسے غیراخلاقی کردارنبھانے کے لیے بھی تیارہوتے ہیں۔

انھوں نے کہا کہ مجھے فوادخان کا کام پسند ہے اوراسی لیے میں فلم دیکھنے سینما گھرگئی تھی لیکن جب ان کا کردارسامنے آیا توبطورپاکستانی مجھ بہت تکلیف پہنچی اوراسی لیے میں نے سوشل میڈیا پربھی اپنی تکلیف کااظہارکیا ہے۔ ہمیں بالی وڈ اوردنیا کی بیشترفلم انڈسٹریوں میں ضرورکام کرنا چاہیے لیکن اس بات کا خیال بھی ضروری ہے کہ ہمارے کسی فعل سے پاک وطن کی بدنامی نہ ہوجائے۔

Share on Pinterest
There are no images.
Share with your friends










Submit
Tags

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close