More share buttons
Share with your friends










Submit
انٹرٹینمنٹ

بچپن سے ہی میں اداکارہ بننا چاہتی تھی، فنکارہ منشا پاشا

Share on Pinterest
Share with your friends










Submit

کراچی: تعلیم یافتہ اور فن کارانہ صلاحیتوں سے مالا مال فنکارہ منشا پاشا نے کہا ہے کہ بچپن سے ہی اداکارہ بننا چاہتی تھی لیکن اس فیلڈ میں آنے سے پہلے میں نے اپنی تعلیم مکمل کی اور پھر شوبز انڈسٹری میں قسمت آزمانے کا فیصلہ کیا ۔ فنکارہ کا کہنا ہے کہ ٹیلی ویژن ڈراموں میں مختلف کردار ادا کرکے اپنے فن کو دھیمی آنچ میں پکا کر کْندن بنایا اور پھر وہ فلموں کی جانب آئی۔منشا پاشا کا تعلق وادی مہران کے خْوب صورت شہر حیدر آباد سے ہے۔

انہوں نے ابتدائی تعلیم حیدر آباد سے حاصل کرنے کے بعد اعلیٰ تعلیم کے لیے روشنیوں کے شہر کراچی کا رْخ کیا۔ شہر قائد کی نجی یونی ورسٹی سے میڈیا کے شعبے میں گریجویشن کیا۔ ابتداء میں انہوں نے پاکستان اور چائنا کے اشتراک سے بننے والی فلم ’’چلے تھے ساتھ‘‘ میں اپنے فن کا مظاہرہ کیا۔ اس فلم میں ناقدین نے ان کی پرفارمنس کو سراہا۔ منشا پاشا نے ٹیلی ویژن پر سپر ہٹ ڈراموں میں کام کیا اور سینئر فن کاروں کی موجودگی میں اپنے فن کا لوہا منوایا۔ رواں ماہ 22مارچ کو ان کی فلم ’’لال کبوتر‘‘ ریلیز ہو رہی ہے، جس میں وہ بہ طور ہیروئن جلوہ گر ہو رہی ہیں۔

Share on Pinterest
Share with your friends










Submit
ٹیگز
مزید دیکھیں

متعلقہ خبریں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے