More share buttons
Share with your friends










Submit
انٹرٹینمنٹ

کشمیر کی حمایت اور بھارت کیخلاف آواز اٹھانے پر وقار ذکا کا سوشل میڈیا اکاؤنٹ معطل

Share on Pinterest
Share with your friends










Submit

کراچی:کشمیر کی حمایت میں آواز اٹھانے اور بھارتیوں کو آئینہ دکھانے پر رئیلیٹی شو کے میزبان وقار ذکا کا فیس بک اکاؤنٹ معطل کردیا گیا۔

وقار ذکا کی ایک ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل

وقار ذکا کی ایک ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہورہی ہے جس میں وہ کہتے نظر آرہے ہیں کہ دنیا چاہے کچھ بھی کرلے ہمارے نبیﷺ کی شان میں کتنے ہی گستاخانہ مواد کیوں نہ شیئر کرلے فیس بک کچھ نہیں کرتی،  لیکن میں نے اپنی ویڈیو کے ٹائٹل میں بھارت کے بارے میں صرف اتنی سی بات لکھی تھی ’’انڈیا تیری ایسی کی تیسی‘‘ اورمیرا فیس بک اکاؤنٹ تین دن کے لیے معطل کردیاگیا۔

سوشل میڈیا پر زیادہ تر بھارتی بیٹھے ہیں

وقار ذکا نے کہا سوشل میڈیا کا کوئی بھی پلیٹ فارم ہو وہاں زیادہ تر بھارتی بیٹھے ہیں اور بھارت کے خلاف کچھ بھی کہنے پر ہماری آواز بند کرنے آجاتے ہیں۔

وقار ذکا نے پاکستانی سوشل میڈیا پر سرگرم افراد کو بھی تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ ہمارے یہاں جتنے بھی یوٹیوبرز ہیں سب پیسے اور سبسکرپشن کے پجاری ہیں اور کشمیر کی حمایت میں آواز نہ اٹھانے کی وضاحت دیتے ہوئے کہتے ہیں کہ ہم اس موضوع پر ویڈیو بنانا نہیں چاہتے کیونکہ ہماری ویڈیو بنانے سے کیا ہوگا؟

لوگ کشمیر کی حمایت یا بھارت کے خلاف کوئی ویڈیو نہیں بنائیں گے

وقار ذکا نے کہا کہ آپ نہیں بولیں گے تو کون بولے گا کیونکہ آواز اس کی سنی جاتی ہے جسے لوگ جانتے ہیں۔ لیکن یہ لوگ کشمیر کی حمایت یا بھارت کے خلاف کوئی ویڈیو نہیں بنائیں گے کیونکہ انہیں معلوم ہے کہ اگر انہوں نے ایسا کیا تو بھارت ان پر پابندی لگوادے گا۔

وقار ذکا نے فیس بک انتظامیہ کوبھی  آڑے ہاتھوں لیتے ہوئے کہا کہ میرا اکاؤنٹ دو بار بند ہوچکا ہے کہاں گئی اظہار رائے کی آزادی۔

پاکستانی یوٹیوبر عرفان جونیجو نے کہاکہ میں کشمیر پر ویڈیو نہیں بناؤں گا

واضح رہے کہ چند روز قبل پاکستانی یوٹیوبر عرفان جونیجو نے کشمیر کے معاملے پر وی لاگ بنانے سے صاف انکار کرتے ہوئے کہا تھاکہ میں کشمیر پر ویڈیو نہیں بناؤں گا کیونکہ میں پہلے بھی سیاسی اور مذہبی موضوع پر ویڈیوبنانے کی غلطی کرچکاہوں۔

سوڈان میں 3 سال کے لیے خود مختار کونسل قائم

Share on Pinterest
Share with your friends










Submit
ٹیگز
مزید دیکھیں

متعلقہ خبریں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button