More share buttons
Share with your friends










Submit
انٹرٹینمنٹ

بولی وڈ اداکارہ ایشا کوپیکر کے ساتھی اداکاروں اور فلم سازوں پر سنگین الزامات

Share on Pinterest
Share with your friends










Submit

بولی وڈ: شوبز انڈسٹری میں میرا جنسی استحصال کیا جاتا رہا اور صرف آئٹم سانگ کے لیے کاسٹ کیا جاتا رہا۔

آئٹم گرل اداکارہ ایشا کوپیکر کا دعویٰ کیا ہے کہ مجھے ساتھی اداکاروں نے جنسی تعلقات استوار کرنے کی پیش کش کی۔

شوبز انڈسٹری میں میرا جنسی استحصال کیا جاتا رہا اور صرف آئٹم سانگ کے لیے کاسٹ کیا جاتا رہا۔

شوبز سے دور رہنے کے بعد اب ایشا کوپیکر کا ایک اہم بیان سامنے آیا ہے، جس میں انہوں نے ساتھی اداکاروں بلکہ فلم سازوں پر بھی سنگین الزامات لگائے ہیں۔ مجھے متعدد اداکاروں نے جنسی تعلقات استوار کرنے کا کہا۔

شوبز ویب سائٹ پنک ولا کو دیے گئے خصوصی انٹرویو میں ایشا کوپیکر نے انکشاف کیا کہ آئٹم گانے کرنے اور بولڈ کردار ادا کرنے کی وجہ سے متعدد ساتھی اداکاروں نے انہیں جنسی تعلقات استوار کرنے کی پیش کش کی۔

ایشا کوپیکر نے یہ انکشاف بھی کیا کہ فلم ساز نے انہیں 2000 میں ریلیز ہونے والی فلم ’کانٹے‘ میں سنجے دت کی گرل فرینڈ کے طور پر کاسٹ کیا تھا، تاہم بعد ازاں ان کا کردار ختم کرکے ان سے آئٹم سانگ ’عشق سمندر‘کروایا گیا۔

ایشا کوپیکر کے مطابق ایک ڈائریکٹر نے انہیں فلم کی شوٹنگ کے دوران علی الصبح بلایا اور ساتھ ہی ہدایت کی کہ وہ اکیلی آئیں، تاہم انہوں نے ایسا کرنے سے انکار کردیا اور کہا کہ وہ اپنے ڈرائیور کے ساتھ آئیں گی۔

ایشا کوپیکر نامور اداکاروں سنجے دت، ارجن رام پال، اجے دیوگن، گووندا اور وویک اوبرائے سمیت دیگر کے ساتھ بھی کام کر چکی ہیں۔

ایشا کوپیکر نے اگرچہ انکشاف کیا کہ انہیں ساتھی اداکاروں نے جنسی تعلقات استوار کرنے کی پیش کش کی، تاہم انہوں نے کسی بھی اداکار کا نام نہیں لیا۔

اداکارہ کے مطابق فلم انڈسٹری میں جب کوئی خاتون کسی کام کے لیے منع کرتی ہے تو اسے کام نہیں دیا جاتا۔

Share on Pinterest
Share with your friends










Submit
Tags

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close