More share buttons
Share with your friends










Submit
انٹرٹینمنٹ

شلپا شیٹھی نے اپنے شوہر پر غیراخلاقی فلمیں بنانے کے الزامات مسترد کر دے

Share on Pinterest
Share with your friends










Submit

 بولی وڈ : اداکارہ شلپا شیٹھی نے کہا کہ میرے شوہر راج کندرا قابل اعتراض فلمیں بناتے ہیں۔

بولی وڈ اداکارہ شلپا شیٹھی نے اپنے شوہر کا ساتھ دیتے ہوئے ان پر غیراخلاقی فلمیں بنانے کے عائد کیے گئے الزامات کو مسترد کرتے ہوئے کہا کہ راج کندرا قابل اعتراض فلمیں بناتے ہیں۔

شلپا شیٹھی کے شوہر راج کندرا کو ممبئی پولیس نے 19 جولائی کو گرفتار کرکے جیل منتقل کردیا تھا اور بعد ازاں 22 جولائی کو انہیں عدالت پیش کیا گیا تھا۔عدالت نے راج کندرا کو 27 جولائی تک جسمانی ریمانڈ پر پولیس کے حوالے کردیا جبکہ پولیس نے کارروائی کرتے ہوئے ان کی رہائش گاہ سے کمپیوٹر اور ہارڈ ڈسک برآمد کرلی۔

بعد ازاں راج کندرا کی اہلیہ اداکارہ شلپا شیٹھی نے 23 جولائی کو ممبئی پولیس کو اپنا بیان ریکارڈ کرواتے ہوئے شوہر پر لگے الزامات کو مسترد کردیا۔شلپا شیٹھی نے اپنا بیان ریکارڈ کرواتے ہوئے شوہر پر لگے الزمات کو یکسر مسترد کرتے ہوئے کہا کہ ان کے جیون ساتھی فحش فلمیں بنانے میں ملوث نہیں ہیں۔

پولیس کو ریکارڈ کروائے گئے بیان میں اداکارہ نے کہا کہ ان کے شوہر کی ʼہاٹ شاٹʼ نامی ایپلی کیشن پر جو مواد دستیاب ہے، اسے فحش (پورن) نہیں کہا جا سکتا۔شلپا شیٹھی نے پولیس کو فحش مواد اور قابل اعتراض مواد میں فرق بھی بتایا اور کہا کہ ان کے شوہر شہوت انگیز فلمیں بناتے ہیں جنہیں پورن نہیں کہا جا سکتا۔

اداکارہ کو پولیس نے اس وقت شامل تفتیش کیا، جب پولیس کو معلوم ہوا کہ اداکارہ نے حال ہی کے ڈائریکٹر کے عہدے سے استعفیٰ دیا تھا۔

رپورٹ میں بتایا گیا کہ اداکارہ نے اس وقت عہدے سے استعفیٰ دیا تھا جب کہ ان کے شوہر کی کمپنی نے فحش یا قابل اعتراض فلمیں بنانے پر کام شروع کیا تھا۔  پولیس اس بات کی بھی تفتیش کر رہی ہے کہ کہیں شلپا شیٹھی نے تو پورن فلمیں بنانے سے کوئی فائدہ حاصل تو نہیں کیا؟۔پولیس شلپا شیٹھی کے بینک اکائونٹس کی بھی تفتیش کر رہی ہے کہ کہیں انہوں نے فحش فلموں سے ہونے والی کمائی میں سے مالی فائدہ تو نہیں اٹھایا؟۔

 

Share on Pinterest
Share with your friends










Submit
Tags

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close