More share buttons
Share with your friends










Submit
Featuredدنیا

مھسا امینی کی موت کے بعد پُرتشدد احتجاج نے ایران کو مکمل طور پر اپنی لپیٹ میں لے لیا

Share on Pinterest
Share with your friends










Submit

تہران: مھسا امینی کی ہلاکت پر تہران اور مشہد میں بھی ہنگامے پھوٹ پڑے

مھسا امینی کی موت کے بعد پُرتشدد احتجاج نے ایران کو مکمل طور پر اپنی لپیٹ میں لے لیا، احتجاجی مظاہروں کا دائرہ مشہد، شیراز اور دارالحکومت تہران سمیت کئی شہروں تک پھیل گیا، پُرتشدد مظاہروں میں اب تک 133 افراد ہلاک ہوچکے ہیں۔

غیر ملکی میڈیا کے مطابق ایرانی لڑکی مھسا امینی کی پولیس حراست میں موت کے خلاف دنیا بھر میں احتجاجی مظاہرے شروع ہوگئے۔

ایران میں مظاہروں کا دائرہ کار تہران اور مشہد مقدس سمیت کئی شہروں میں پھیل چکا ہے، تہران کی شریف یونیورسٹی کے طلباء و طالبات نے بھی گزشتہ روز احتجاج کیا ، اس دوران مظاہرین اور پولیس کے درمیان جھڑپیں بھی ہوئیں۔
رپورٹ کے مطابق آسٹریلیا، امریکا، برطانیہ، اٹلی، سوئٹزرلینڈ، نیدرلینڈز اور جرمنی میں بھی ہزاروں افراد نے ایرانی مظاہرین سے اظہارِ یکجہتی کیا۔

 

 

 

Share on Pinterest
Share with your friends










Submit
Tags

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close