More share buttons
Share with your friends










Submit
Featuredکشمیر

اگر پاکستان پر حملہ ہوا تو یہ آخری جنگ ہوگی

Share on Pinterest
Share with your friends










Submit

آزاد کشمیر : اب کشمیر کا مسئلہ آر پار ہونا ہے اور فیصلے کا وقت آگیا تو بھارت میں ہر مسلمان کے گھر سے نعرہ تکبیر بلند ہوگا

وزیر ریلوے شیخ رشید کا کہنا ہے کہ مجھے یقین ہے مودی حملہ نہیں کر سکتا، لیکن اگر پاکستان پر حملہ ہوا تو ہمارے پاس روایتی جنگ کا کوئی آپشن نہیں ہے یہ آخری جنگ ہوگی جس کے بعد بھارت میں گھاس تک نہیں اُگے گی۔

آزاد کشمیر میں خطاب کرتے ہوئے شیخ رشید نے کہا کہ نازی مودی نے جو غلطی اور حماقت کی ہے اللہ نے کشمیر کو پاکستان سے ملانے کا فیصلہ کر لیا ہے اور لال حویلی کا رشتہ سری نگر کے لال چوک سے ہے یہ وقت بتائے گا۔

دنیا جان لے کشمیری قوم، فلسطینی اور بوسنیا کی قوم جیسی نہیں

آج مقبوضہ کشمیر میں خوراک اور ادویات کی شدید کمی ہے، وہاں زندگی مفلوج ہے، میں عسکری نہیں سیاسی ماہر ہوں اور کشمیر کی سیاست مجھ سے زیادہ کوئی نہیں جانتا، سری نگر کی گلی گلی جانتا ہوں، دنیا جان لے کشمیری قوم، فلسطینی اور بوسنیا کی قوم جیسی نہیں۔

عالمی میڈیا بھی ہٹلر مودی کے خلاف ہو رہا ہے

شیخ رشید نے کہا کہ72 سالوں سے کشمیری اپنا خون دے رہے ہیں اور عذاب کی زند گی گزار رہے ہیں، پاکستان میچ جیتتا ہے تو 6 کشمیری شہید کر دیئے جاتے ہیں۔72 سال تک ہم نے آج کے دن کے لیے پیسے لگائے ہیں اور ہماری فوج آج کے دن کے لیے تیار ہوئی ہے، ہماری نظر اللہ کی مدد پر ہونی چاہیے، آج ہم جو انسانی حقوق کی بات کر رہے ہیں اس کی وجہ سے عالمی میڈیا بھی ہٹلر مودی کے خلاف ہو رہا ہے۔

وزیر ریلوے کا کہنا تھا کہ عمران خان نے امریکی پالیسی کو نیٹرل کیا ہے لیکن امریکا کی پالیسی پر اعتبار نہیں کیا جاسکتا، میں عمران خان کے اس فیصلے کو سلام پیش کرتا ہوں کہ بھارت سے مذاکرات کے دروازے بند ہو چکے ہیں، جس نے بھی کشمیر سے غداری کی قوم اسے کتوں کے آگے ڈال دے گی، اب ہر پاکستانی کا فرض ہے کہ عمران خان کے ساتھ کھڑا ہو۔

بھارت میں ہر مسلمان کے گھر سے نعرہ تکبیر بلند ہوگا

اگلے 5 سے 6 ماہ سیاست کی دنیا کے لیے بہت اہم ہیں، عمران خان سمجھتے ہیں کہ ایک دو ماہ میں کشمیر کا مسئلہ حل ہوجائے گا، اب کشمیر کا مسئلہ آر پار ہونا ہے اور فیصلے کا وقت آگیا تو بھارت میں ہر مسلمان کے گھر سے نعرہ تکبیر بلند ہوگا۔

چین پاکستان کے ساتھ چٹان کی طرح کھڑا ہے، ہمیں بھی چین کے ساتھ کھڑا ہونا ہے کیونکہ چین آزمودہ دوست ہے۔

 

Share on Pinterest
Share with your friends










Submit
Tags

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close