More share buttons
Share with your friends










Submit
Featuredاسلام آباد

لاک ڈاؤن میں نرمی کے فیصلے پر نظر ثانی کی جائے : ماہرین

Share on Pinterest
Share with your friends










Submit

اسلام آباد: ملک میں 700سےزائد ہیلتھ پروفیشنلز کورونا سے متاثرہوچکے ہیں اورآئسولیشن وارڈ کےباہر ڈیوٹی کرنے والے زیادہ متاثر ہو رہے ہیں۔

ڈاکٹراسفند یار نے وزیر اعظم سے اپیل کی کہ لاک ڈاؤن میں نرمی کےفیصلے پر نظر ثانی کی جائے، ملک میں 700سےزائد ہیلتھ پروفیشنلز کورونا سے متاثرہوچکے ہیں۔

چیئرمین ینگ کنسلٹنٹ ایسوسی ایشن پاکستان ڈاکٹراسفند یار نے ویڈیو پیغام میں کہا ہے کہ ملک میں 700سےزائد ہیلتھ پروفیشنلز کورونا سے متاثرہوچکے ہیں اورآئسولیشن وارڈ کےباہر ڈیوٹی کرنے والے زیادہ متاثر ہو رہے ہیں۔

ڈاکٹر اسفند یار کا کہنا تھا کہ متاثر بیشتر ہیلتھ پروفیشنلز کو حفاظتی سامان فراہم نہیں کیا گیا ،حکومت سےاپیل ہےفرنٹ لائن سولجرز کی حفاظت کےاقدامات کرے اور این 95 ماسک، فیس شیٹ ، گلوز، اور کٹس فراہم کی جائیں۔

وزیر اعظم سے اپیل ہے لاک ڈاؤن میں نرمی کےفیصلے پر نظر ثانی کی جائے ، سرکاری اسپتالوں میں سب سےاہم فیصلہ او پی ڈیز کھولنے کا ہے، ایک دم او پی ڈیز کھولنے سے رش اور کیسوں میں اضافے کاامکان ہے۔

Share on Pinterest
Share with your friends










Submit
Tags

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close