More share buttons
Share with your friends










Submit
Featuredتعلیم و ٹیکنالوجی

فیس ماسک پہننے سے وائرس کا خطرہ کم ہو جاتا ہے

Share on Pinterest
Share with your friends










Submit

فیس ماسک کی وجہ سے موذی وائرس کا خطرہ 65 فیصد کم ہو جاتا ہے

امریکا کے طبی ماہرین نے دعویٰ کیا ہے کہ کرونا سے محفوظ رہنے کے لیے ماسک پہننے والے افراد وائرس سے دیگر کے مقابلے میں زیادہ محفوظ رہتے ہیں۔

رپورٹ کے مطابق امریکی ریاست کیلی فورنیا میں واقع Davis Children’s Hospital کے ماہرین نے فیس ماسک پہننے اور اس کی وجہ سے کرونا سے محفوظ رہنے کے حوالے سے تحقیق کی۔

ماہرین کے مطابق اپنے چہرے کو ڈھانپنے والے افراد کا کرونا سے متاثر ہونے کا خطرہ 65 فیصد تک کم ہوجاتا ہے۔

ماہرین کے مطابق کرونا مریضوں سے صحت مند افراد میں آسانی سے منتقل ہوسکتا ہے، اس لیے اپنے منہ کو ڈھانپنا ضروری ہے کیونکہ وائرس ناک اور منہ کے ذریعے جسم میں داخل ہوکر اسے متاثر کرسکتا ہے۔

تحقیقی رپورٹ میں ماہرین نے عوام کو ماسک لازمی پہننے کا مشورہ دیتے ہوئے کہا کہ جو لوگ کہتے ہیں کہ انہیں ماسک کے مؤثر ہونے پر یقین نہیں، وہ سائنسی شواہد کو نظرانداز کرتے ہیں۔

ماہرین کے مطابق اس وقت دنیا بھر میں کرونا وائرس کے کم از کم 30 فیصد مریض ایسے ہوتے ہیں جن میں علامات سامنے نہیں آئیں اور اسی وجہ سے فیس ماسک کا استعمال صحت مند فرد کو اس وبا سے محفوظ رکھنے میں مدد دے سکتا ہے۔

Share on Pinterest
Share with your friends










Submit
Tags

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close