More share buttons
Share with your friends










Submit
Featuredانٹرٹینمنٹ

پی ٹی وی 4 دہائیاں گزرجانے کے باوجود سبق سیکھ نہیں پایا

Share on Pinterest
Share with your friends










Submit

سیمی راحیل پی ٹی وی سے 1400 روپے معاوضہ ملنے پر برہم

سینیئر اداکارہ 63 سالہ سیمی راحیل نے پاکستان ٹیلی وژن (پی ٹی وی) کی جانب سے کام کا معاوضہ محض 1400 روپے فراہم کرنے پر سخت رد عمل دیتے ہوئے برہمی کا اظہار کیا ہے۔

سیمی راحیل نے اپنے سوشل میڈیا اکاؤنٹ پر پی ٹی وی کی جانب سے ملنے والے چیک کی تصویر شیئر کرتے ہوئے برہمی کا اظہار کیا کہ انہیں کام کا معاوضہ محض 1400 روپے ادا کیا گیا۔

سینیئر اداکارہ نے اپنی پوسٹ میں لکھا کہ پی ٹی وی انتظامیہ کی جانب سے کام کا معاوضہ محض 1400 روپے دیے جانا افسوس ناک ہے اور انہیں اتنا کم معاوضہ ملنے پر اپنی بے عزتی محسوس ہوئی۔

سیمی راحیل کے مطابق پی ٹی وی 4 دہائیاں گزرجانے کے باوجود سبق سیکھ نہیں پایا اور ریاستی ٹی وی کی انتظامیہ سینیئر اداکاروں کے ساتھ ناروا سلوک کرتی ہے۔

انہوں نے لکھا کہ کام کا معاوضہ اتنا کم دیے جانے سے لوگ فیصلہ کریں کہ ریاست فنکاروں کے ساتھ کیسا برتاؤ کرتی ہے۔

ساتھ ہی انہوں نے ٹیلی وژن، ڈراما انڈسٹری، ایم ڈی پی ٹی وی، چیئرمین پی ٹی وی، آرٹسٹ، اداکار اور انفارمیشن منسٹر کے ہیش ٹیگ بھی استعمال کیے۔

سیمی راحیل نے پی ٹی وی کی جانب سے محض 1400 روپے کا چیک دیے جانے کی پوسٹ 27 نومبر کو شیئر کی، تاہم فوری طور پر اس پر پی ٹی وی کا کوئی رد عمل سامنے نہیں آ سکا۔

سیمی راحیل نے اسی حوالے سے ایک ویب سائٹ سے بات کرتے ہوئے انکشاف کیا کہ انہوں نے رواں برس اگست میں یوم آزادی کے ایک پروگرام میں شرکت کی تھی، جس کا معاوضہ انہیں کئی ماہ بعد 1400 روپے چیک کی صورت میں ادا کیا گیا۔

انہوں نے پی ٹی وی انتظامیہ پر سخت تنقید کرتے ہوئے دعویٰ کیا کہ جو لوگ انتظامیہ کے من پسند ہوتے ہیں، انہیں انتظامیہ نہ صرف بھاری معاوضہ ادا کرتی ہے بلکہ ایسے افراد کو ایوارڈز سے بھی نوازا جاتا ہے۔

ویب سائٹ کے مطابق سیمی راحیل کا کہنا تھا کہ پی ٹی وی انتظامیہ اداکارہ میرا اور ریما جیسی اداکاراؤں کو لاکھوں روپے فراہم کرتی ہے جب کہ سینیئر فنکاروں کے ساتھ ان جیسا سلوک ہو رہا ہے۔

 

 

Share on Pinterest
Share with your friends










Submit
Tags

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close