More share buttons
Share with your friends










Submit
Featuredانٹرٹینمنٹ

فلم ’’دی میٹرکس ‘‘میں سبز کوڈکی بارش کا راز

Share on Pinterest
Share with your friends










Submit

میٹرکس کوڈ تیار کرنے والے سائمن وائٹیلے نے سنہ 1999 کی مشہور زمانہ سائنس فکشن فلم دی میٹرکس میں سبز کوڈ کی بارش کی حقیقت سے پردہ اٹھا دیا۔

بائیس سال قبل ریلیز ہونے والی سائنس فکشن فلم دی میٹرکس سائنس فکشن موویز دیکھنے کے شوقین افراد کےلیے بھی حیران کن تھی کیوں کہ اس فلم کے اندر سبز کوڈ کی بارش دیکھائی گئی ہے جسے ہضم کرنا یقیناً مشکل ہے۔

اس فلم میں کمپیوٹر اسکرین میں بارش کی طرح چلنے والے سبز کوڈ کا مطلب کیا تھا؟

آئیے اس کوڈ کی حقیقت سے پردہ اٹھاتے ہیں، میٹرکس کوڈ کے موجد سائمن وائٹیلے کا کہنا ہے کہ یہ کوڈ درحقیقت ان کی بیوی سے منسوب ہے جن کا تعلق جاپان سے تھا۔

انہوں نے بتایا کہ میٹرکس کا یہ مشہور زمانہ کوڈ درحقیقت جاپان کے مشہور کھانے سوچی پکانے کی متعدد تراکیب ہیں۔

سائمن نے میڈیا کو بتایا کہ فلم کے ڈائریکٹرز کو ان کا بنایا ڈیزائن پسند نہیں آیا جس پر انہوں نے ایسا کوڈ تشکیل دینے کو کہا جو مہنگا بھی ہو اور جاپانی بھی لگے۔

ڈائریکٹر کی خواہش کو پورا کرنے کےلیے انہوں نے اپنی بیوی کے پاس موجود جاپانی کھانا پکانے والی کتابوں کی جانچ پڑتال شروع کردی، ایک کتاب ان کے دل کو بھا گئی اور اس میں موجود ریسیپیز نے میٹرکس کے مشہور و معروف کوڈ کو ترتیب دیا۔

سائمن نے یہ کوڈ ڈائریکٹرز کو بھیجا اور اس کوڈ کو بارش کی طرح اوپر سے نیچے کی جانب لے جانے کا کہا جس کے بعد میٹرکس بنی۔

Share on Pinterest
Share with your friends










Submit
Tags

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close