More share buttons
Share with your friends










Submit
Featuredاسلام آباد

حکومت نے شور و غل کے درمیان اسمبلی سے فنانس ترمیمی بل 2021 پاس کرالیا

Share on Pinterest
Share with your friends










Submit

اسلام آباد : فنانس ترمیمی بل 2021 میں سیاحوں کی جانب سے درآمد کیے جانے والے ذاتی ملبوسات اور سامان پر بھی ٹیکس عائد کر دیا گیا۔

اپوزیشن کے روز کے بیانات، تقاریر اور ترامیم کچھ کام نہ آئیں، وفاقی حکومت نے شور و غل کے درمیان قومی اسمبلی سے فنانس ترمیمی بل 2021 پاس کرالیا۔

فنانس ترمیمی بل 2021 میں درآمدی موبائل فون، جیولری، 500 روپے مالیت سے زائد کے شیرخوار بچوں کے فارمولا دودھ، فارماسیوٹیککلز درآمدی مال، صنعتی و زرعی آلات سمیت 140سے زائد اشیاء پر 17 فیصد سیلز ٹیکس لگا دیا گیا ہے۔

شیر خوار بچوں کے 500 روپے تک کے 200 گرام کے فارمولا دودھ، سرخ مرچ، نمک، سائیکل، چھوٹی دکانوں پر فروخت ہونیوالی بریڈ، نان چپاتی، سویاں، شیر مال، رس کو سیلز ٹیکس سے چھوٹ دے دی گئی ہے۔

درآمدی زندہ جانوروں ور درآمدی زندہ مرغی، بھیڑ، بکری کے درآمدی گوشت، درآمدی زندہ مچھلی، درآمدی انڈے اور ہیچنگ انڈے، درآمدی سیمپل، درآمدی تحفوں پر سیلز ٹیکس چھوٹ ختم کردی گئی۔

ٹی بی، لیپروسی، ایڈز اور کینسر کے علاج کے درآمدی آلات، گونگے، بہرے اور اندھے افراد کے علاج اور بحالی کیلئے درآمدی آلات، غیر منافع بخش اداروں کی جانب سے درآمد کیے جانیوالے آلات پر بھی سیلز ٹیکس استثنیٰ ختم ہوگیا۔

غیر ملکی کمپنیوں کی جانب سے نمائش اور تجارتی میلوں کیلئے درآمدی سامان اور خدمات پر بھی ٹیکس کی چھوٹ باقی نہ رہی۔

پیکنگ والا درآمدی مرغی کا گوشت، کاٹن سیڈ، سلائی مشین، ایکسپورٹ پروسسنگ زون میں لگائی جانیوالی مشنیری اور پلانٹس، درآمدی خام ادویات پر سیلز ٹیکس کی چھوٹ اب نہ نہیں ہے۔

گرین ہائوس فارمنگ کے آلات، فاٹا میں صنعت لگانے کیلئے درآمدی پلانٹ اور مشینری، ڈیری فارم فین، مچھلی کی خوراک اور درآمدی مائیکرو فیڈر آلات پر سیلز ٹیکس استثنیٰ ختم ہوگیا۔

200 ڈالر سے 350 ڈالر تک کے درآمدی موبائل فون سیٹ پر ٹیکس 1740 روپے کے بجائے 17فیصد، 350 ڈالر سے 500 ڈالر تک کے موبائل فون سیٹ پر 5400 روپے ٹیکس کے بجائے 17فیصد، 500 ڈالر سے اوپر کے موبائل فون سیٹ پر 9270 روپے فی سیٹ سے بڑھا کر 17 فیصد سیلز ٹیکس عائد کردیا گیا ہے۔

غیر ملکی ٹی ڈراما سیریل اور اشتہارات پر ایڈوانس ٹیکس عائد کر دیا گیا۔ غیر ملکی ڈراما سیریل کی پر فی قسط 10لاکھ روپے ایڈوانس ٹیکس، غیر ملکی تیار کردی ٹی وی پلے فی قسط 30 لاکھ روپے اور غیر ملکی اداکاروں والے اشتہارات پر 5 لاکھ روپے فی سیکنڈ ایڈوانس ٹیکس عائد کیا گیا۔

موبائل فونز پر یکساں 17 فیصد ٹیکس عائد، جیولری پر ٹیکس 1 فیصد سے بڑھا 17 فیصد، آئل سیڈ کی درآمد پر ٹیکس 5 فیصد سے 17 فیصد کرنے کی منظوری دی گئی ہے۔

درآمدی جانوروں اور مرغیوں پر 17 فیصد، زرعی بیج، پودوں، زرعی آلات اور کیمیکل پر ٹیکس 5 سے 17 فیصد، پولٹری سیکٹر کی مشینری پر ٹیکس 7 سے 17 فیصد کر دیا گیا۔

ملٹی میڈیا ٹیکس بھی 10 سے بڑھا کر 17 فیصد، بیٹری پر ٹیکس 12 سے بڑھا کر 17 فیصد، ڈیوٹی فری شاپس پر 17 فیصد سیلز ٹیکس لگانے کی منظوری دی گئی۔

درآمدی سبزیوں پر 10 فیصد سیلز ٹیکس، پیکنگ میں فروخت ہونے والے مصالحوں پر 17 فیصد سیلز ٹیکس لگایا جائے گا۔

ماچس، ڈیری مصنوعات الیکٹرک سوئچ پر 17 فیصد، برانڈڈ مرغی کے گوشت پر بھی 17 فیصد، پراسس کئے ہوئے دودھ پر ٹیکس 10 سے 17 فیصد کر دیا گیا۔

کیٹررز، ہوٹلز اور بڑے ریسٹورنٹس پر ٹیکس 7.5 فیصد سے بڑھا کر 17 فیصد، سیب کے علاوہ درآمدی پھلوں، سبزیوں پر 10 فیصد سیلز ٹیکس عائد کیا گیا۔

پیکنگ میں دہی پنیر، مکھن، دیسی گھی اور بالائی پر ٹیکس 10 فیصد سے 17 فیصد اور ڈیری کیلئے مشینری پر بھی ٹیکس 17 فیصد ہوگا۔

برانڈڈ پیکنگ کے فلیورڈ دودھ پر ٹیکس 10 فیصد سے بڑھا کر 17 فیصد، ایڈورٹائزنگ میٹریل، وفاقی اور صوبائی اسپتالوں کی طرف سے درآمد کردہ سامان پر 17 فیصد ٹیکس عائد کردیا گیا۔

اقوام متحدہ کی مختلف ایجنسیوں، سفارتکاروں، سفارتی مشنز کی جانب سے درآمد کردہ سامان پر بھی 17 فیصد ٹیکس لگا دیا گیا ہے۔

قدرتی آفت کی صورت میں عطیہ کی جانیوالی درآمدی اشیاء، توانائی کے قابل تجدید ذرائع سولر، ونڈ اور آبپاشی کے آلات، سنگل سلینڈر والے زرعی ڈیزل انجن، پانچ سال تک پرانے کمائنڈ ہارویسٹرز پر بھی 17 فیصد سیلز ٹیکس نافذ کردیا گیا۔

کوئلے کی کان کی کنی کی مشینری، کان کنی کے آلات، تھرل کول فیلڈ کیلئے درآمد کیے جانے والے آلات، پلانٹ اور مشینری کی درآمد پر سیلز ٹیکس کو 10 فیصد سے بڑھا کر 17 فیصد، موبائل فون کے مقامی مینوفیکچررز کی جانب سے موبائل فون کی مشینری اور پلانٹ کی درآمد پر بھی 17 فیصد ٹیکس کا پہاڑ کھڑا کیا گیا ہے۔

Share on Pinterest
Share with your friends










Submit
Tags

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close