More share buttons
Share with your friends










Submit
اسلام آباد

سپریم کورٹ نے اصغر خان کیس بند کرنے کی ایف آئی اے کی رپورٹ اپیل مسترد کردی

Share on Pinterest
Share with your friends










Submit

سپریم کورٹ میں اصغر خان عمل درآمد کیس کی سماعت میں عدالت نے کیس بند کرنے کی ایف آئی اے کی درخواست مسترد کر دی۔ چیف جسٹس نے ریمارکس دیئے کہ کئی نکات ایسے ہیں جن پر تحقیقات کی جائیں تو ٹرائل کیلئے مواد مل سکتا ہے۔ اصغر خان کے ورثاء کی درخواست پر ایف آئی اے سے جواب طلب کیا ہے، ہم اصغر خان کے اہل خانہ کے ساتھ ہیں۔

سپریم کورٹ آف پاکستان میں چیف جسٹس ثاقب نثار کی سربراہی میں بینچ نے اصغر خان کیس کی سماعت کی۔ اس موقع پر چیف جسٹس نے کیس بند کرنے کی وفاقی تحقیقاتی ادارے (ایف آئی اے) کی استدعا مسترد کر دی۔ عدالتی ریمارکس میں کہا گیا کہ کیس میں کئی نکات ایسے ہیں جن سے ٹرائل کیلئے مواد مل سکتا ہے، جب کہ اصغر خان کے ورثاء کی درخواست پر ایف آئی اے جواب بھی طلب کرلیا گیا۔

چیف جسٹس نے اصغر خان کے وکیل سلمان اکرم راجا سے اتفسار کیا کہ آپ عدالت کی معاونت کریں، اس کیس کو کیسے آگے بڑھایا جائے، ایک عدالتی فیصلہ آیا اور اب عملدرآمد کے وقت ایسا ہورہا ہے، کچھ افراد کو اس معاملے سے علیحدہ کرنے کی تجویز تھی اس پر سلمان اکرم راجا نے کہا کہ ایسا نہیں ہونا چاہیے۔

چیف جسٹس کا مزید کہنا تھا کہ اصغر خان کی زندگی کا بڑا حصہ اس کیس میں گزرا، اصل تحقیقات کا وقت آیا تو رکاوٹیں آنے لگیں، ایف آئی اے والے کہتے ہیں کہ اُن کے پاس شواہد نہیں، عدالت نے تاحال کیس بند نہیں کیا، کیا عدالتی فیصلے پر عمل کرنے کا کوئی اور طریقہ ہے؟، وکلاء معاونت کریں، تحقیقات کیسے کرائیں، عدالت کا مقصد صرف 2 افسران کیخلاف تحقیقات نہیں، بلکہ کیس کو منطقی 

Share on Pinterest
Share with your friends










Submit
ٹیگز
مزید دیکھیں

متعلقہ خبریں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے