صفحہ اول پاکستان خیبر پختونخواہ اپوزیشن کوغم ہے اگرترقی جاری رہی تو ان کی سیاست ختم ہوجائے گی، وزیراعظم

اپوزیشن کوغم ہے اگرترقی جاری رہی تو ان کی سیاست ختم ہوجائے گی، وزیراعظم

1 min read
0
0
Share on Pinterest
There are no images.
Share with your friends










Submit

کوہاٹ: وزیراعظم نوازشریف کا کہنا ہے کہ آج پاکستان بھر میں اقتصادی ترقی ہورہی ہے جس کی رفتار بھی بہت تیز ہے اور اسی وجہ سے اپوزیشن کو یہ غم ہے کہ اگرترقی جاری رہی تو ان کی سیاست ختم ہوجائے گی۔

کوہاٹ میں جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم نوازشریف کا کہنا تھا کہ آج پاکستان بھرمیں اقتصادی ترقی ہورہی ہے اور ترقی کی رفتاربھی بہت تیزہے جب کہ آئی ایم ایف اورورلڈ بینک سمیت اے ڈی بی کے سربراہان نے پاکستان کی ترقی کو سراہا ہے لہذا اسی وجہ سے اپوزیشن کویہ غم ہے کہ اگرترقی جاری رہی تو ان کی سیاست ختم ہوجائے گی۔ ان کا کہنا تھا کہ سی پیک بنائیں گے اورلوڈشیڈنگ ختم کریں گے، 2018 میں بجلی کی لوڈشیڈنگ ختم ہوجائے گی جب کہ 2013 میں دہشت گردی ملک بھرمیں پھیلی ہوئی تھی لیکن آج دہشت گردی کی کمرٹوٹ چکی ہے۔

نوازشریف نے کہا کہ کوہاٹ کے لوگوں کا جذبہ اورکارکنوں کی بڑی تعداد دیکھ کردل باغ باغ ہوگیا، میں نے سوچاکہ کوہاٹ والوں کے لیے تحفہ لیکر جاؤں اور یہ تحفہ کوہاٹ کے لوگوں پر کوئی احسان نہیں ہے، یہاں جو ترقی ہورہی ہے وہ آپ لوگ مجھ سے بہتر جانتے ہیں جب کہ میں سمجھتا ہوں کہ کے پی کے کو تبدیل ہونا چاہیے اور وہ تبدیلی ہم لیکر آئیں گے. ان کا کہنا تھا کہ کوہاٹ  میں گیس منصوبہ شروع ہورہا ہے جس پر تقریباً 3.9ارب روپے لاگت آئی گی، آج سے پہلے کسی نے کبھی بھی کوہاٹ کو گیس دینے کی بات نہیں کی لیکن یہ چارسو کروڑ کوہاٹ کی ماؤں ، بہنوں بزرگوں پر قربان ہیں۔

وزیراعظم نے کوہاٹ میں اسٹیٹ آف دی آرٹ اسپتال اور خواتین کے لیے یونیورسٹی کے کیمپس بنانے سمیت ریل کارسروس شروع کرنے کااعلان کرتے ہوئے کہا کہ غریبوں کے لیے مفت علاج کامنصوبہ لارہے ہیں اور اب کسی کو بھی علاج کے لیے اپنی جائیداد نہیں بیچناپڑے گی۔ ان کا کہنا تھا کہ کوہاٹ کو موٹر وے سے ملایا جائے گا اور ہائی وے بننے سے پشاور اور اسلام آباد کا راستہ کم ہو جائےگا۔

Share on Pinterest
There are no images.
Share with your friends










Submit
مزید مماثل خبریں

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Check Also

پشاور میں چلنے والے 50 ہزار رکشے غیر قانونی ہونے کا انکشاف

پشاور: صوبائی دارالحکومت میں چلنے والے 85 ہزار رکشوں میں 50 ہزار غیر قانونی ہونے کا انکشاف…