More share buttons
Share with your friends










Submit
Featuredدنیا

پاپائے روم نے میاں بیوی کو مشروط طور پر باہمی لڑائی کی اجازت دے دی

Share on Pinterest
Share with your friends










Submit

روم: پاپائے روم پوپ فرانسیس نے کہا ہے کہ والدین کو بچوں سے دور رہ کراپنی لڑائی لڑنی چاہیے۔ میاں بیوی آپس میں باہمی لڑائی لڑسکتے ہیں مگر انہیں یہ سب کچھ بچوں سے دور رہ کر کرنا چاہیے۔ اگر والدین بچوں کے سامنے ایک دوسرے سے الجھیں گے تو اس کے بچوں پر منفی نفسیاتی اثرات مرتب ہوں گے۔

عرب ٹی وی کے مطابق 27 بچوں کو بپتسمہ دینے کی تقریب سے خطاب میں پوپ فرانسیس کا کہنا تھا کہ میں والدین کو مشورہ دیتا ہوں کہ وہ اپنے بچوں میں ایمان کی منتقلی کا اپنا فرض پورا کریں۔اس موقع پر پوپ فرانسیس نے والدین کو کچھ غیر رسمی نصیحتیں بھی کیں۔انہوں نے کہا کہ میاں بیوی میں الجھنیں فطری امر ہے۔ اگر وہ لڑیں گے نہیں تواس پر حیرت ہوگی۔ وہ لڑیں ضرور مگر بچے اسے دیکھیں اور نہ ہی سنیں۔

Share on Pinterest
Share with your friends










Submit
Tags

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close