More share buttons
Share with your friends










Submit
پنجاب

ادارے ہمارے ہیں ، ان کے خلاف بیان مناسب نہیں

Share on Pinterest
Share with your friends










Submit

لاہور : وزیر اعلیٰ پنجاب کا کہنا ہے کہ پی ٹی آئی کی قیادت کو شہباز گل کے بیان سے الگ ہونا چاہیے۔

وزیر اعلیٰ پنجاب چوہدری پرویز الہٰی نے ایک انٹرویو میں کہا ہے کہ آئی جی اور چیف سیکریٹری شہباز شریف نے لگائے تھے۔ میں نے آئی جی اور چیف سیکریٹری کو اوون کیا اور انہیں دل سے لگایا۔ انتقام لینے کے خلاف ہوں، اس پر اپنا وقت ضائع نہیں کرنا چاہتا ہوں۔

انہوں نے مزید کہا کہ لوگوں نے میری کارکردگی کا پوچھنا ہے، انتقام پر وقت کا ضیاع ٹھیک نہیں سمجھتا۔ وزیراعظم سیلاب متاثرہ علاقوں میں گئے، میں نے ہی پہلے وہاں آئی جی اور چیف سیکریٹری کو بھیجا۔ چیف سیکریٹری سے کہا وزیراعظم جو اعلان کریں اس پر ہم نے بھی عمل کرنا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ عمران خان کو ہم نے سیکیورٹی دینی ہے کیوں نہیں دیں گے۔ وزیر داخلہ پنجاب کے ساتھ جو سیکیورٹی تھی، وہ ساتھ گئی، ہم نے قانونی کام کیا۔ عمران خان کا بیان ہے کہ جو فوج کے خلاف ہو۔ وہ پاکستانی نہیں۔

وزیر اعلیٰ پنجاب نے کہا کہ میں نے شہباز گِل کے بیان کے خلاف بیان دیا۔ پی ٹی آئی کی قیادت کو شہبازگل کے بیان سے الگ ہونا چاہیے۔ ادارے ہمارے ہیں، ان کے خلاف بیان مناسب نہیں۔ شہباز گل کے بیان سے فائدہ نہیں نقصان ہوا۔

چوہدری پرویز الہٰی نے کہا کہ وزیر داخلہ رانا ثناءاللہ کا کوئی ذمہ دار بیان دکھادیں تو میں مان لوں۔ سیاسی مخالفت چلتی رہتی رہے گی، ملک اور صوبے کے مفاد پر کوئی تناو نظر نہیں آئے گا۔ طلال چوہدری نے عدالت کے خلاف بات کی سزا ہوئی اور نااہل ہو کر بیٹھ گئے۔ پرویز مشرف کے دور میں بھی اپنے کسی محکمے میں مداخلت نہیں ہونے دی۔

Share on Pinterest
Share with your friends










Submit
Tags

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close