More share buttons
Share with your friends










Submit
Featuredاسلام آباد

بچےکی پیدائش سے2سال تک ماؤں کو وظیفہ دینےکافیصلہ

حساس نشوونماپروگرام کےتحت ایک گھرانےمیں2بچوں کوسپورٹ کیاجائےگا

Share on Pinterest
Share with your friends










Submit

اسلام آباد: وفاقی حکومت نے ماؤں کو بچے کی پیدائش سے 2 سال تک وظیفہ دینے کا فیصلہ کیاہے

تفصیلات کےمطابق وفاقی حکومت کا ماؤں کو بچے کی پیدائش سے 2 سال تک وظیفہ دینے کا فیصلہ کیاہے احساس نشوونما پروگرام کے تحت لڑکی کی پیدائش پرماں کو 2ہزار روپے اور لڑکے کی پیدائش پر 1500روپے ملیں گے،

اسلام آباد میں پریس کانفرنس کرتے ہوئےوزیراعظم عمران خان کی معاون خصوصی برائے سماجی تحفظ اور احساس پروگرام کی چیئرپرسن ڈاکٹر ثانیہ نشتر کا کہنا ہے کہ ملک کے 9 اضلاع میں اس کا آغاز کیا جارہا ہے۔8 سینٹرز فنکشنل ہیں باقی پورے 33 رواں ماہ میں ہی مکمل کر لیے جائیں گے۔ معاون خصوصی نے کہا کہ کیش کفالت پروگرام کے رجسٹرڈ خاندانوں کے لیے ہی یہ ایک پروگرام ہے.

ثانیہ نشتر نے بتایا کہ دو قسم کے پراڈکٹس مہیاء کیے جائیں گے ،ایک ماں اور ایک بچے کے لیے ہوگا۔ ماں کو 15 ماہ اور بچوں کو 2 سال تک یہ غذا فراہم کی جائیں گی۔

ثانیہ نشتر کا کہنا تھا کہ احساس پروگرام کا خیبر پختونخوا میں نیا پروگرام شروع ہورہا ہے جس میں وزیراعظم بھی شریک ہوں گے، یہ پروگرام غذائی قلت سے متعلق ہے۔ معاون خصوصی نے بتایا کہ احساس نشوونما پروگرام کے تحت ایک گھرانے میں 2 بچوں کو سپورٹ کیا جائے گااور ماؤں کو لڑکا ہونے پر 1500 اور لڑکی کی پیدائش پر 2000 روپے فی سہ ماہی ملیں گے۔

ان کا کہنا تھا کہ بچے کی پیدائش کے 15 ماہ تک خواتین اس پروگرام سے مستفید ہوں گی، تمام صوبائی حکومتوں سے یادداشت پر دستخط ہوچکے ہیں جب کہ احساس نشوونما کے بعد احساس تعلیم کا آغاز بھی کیا جائے گا۔معاون خصوصی کا کہنا تھا کہ احساس کے دائرہ کار میں بہت سے پروگرامز ہیں۔

گذشتہ ایک سال سے بہت سے پروگراموں کا اجراء کیا گیا ہے۔ ثانیہ نشتر نے کہا کہ اب احساس نشونماء کا آغاز کر رہے ہیں ،احساس تعلیم کا آغاز بھی جلد ہی ہوگا۔یہ پروگرام ماہرین کےساتھ ایک سال کی مشاورت کے بعد تشکیل دیا گیا ہے۔ اس پروگرام میں حاملہ خواتین کو اسپیشلائزڈ نیوٹریشنز دئیے جائیں گے۔

Share on Pinterest
Share with your friends










Submit
Tags

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close